صفحہ اول | خبریں | این اے64پر اس وقت آٹھ سے زائد امیدوار نظر آرہے ہیں

این اے64پر اس وقت آٹھ سے زائد امیدوار نظر آرہے ہیں

Font size: Decrease font Enlarge font
این اے64پر اس وقت آٹھ سے زائد امیدوار نظر آرہے ہیں

تلہ گنگ :عام انتخابات کا اعلان ہوچکا، ضلع چکوال کی دو قومی اور چار صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر ابھی تک کسی بڑی اور چھوٹی جماعت نے اپنے امیدواروں کی نامزدگی کا اعلان نہ کیا ہے، این اے64پر اس وقت آٹھ سے زائد امیدوار نظر آرہے ہیں جن میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی جانب سے میجر طاہراقبال،ملک تنویر اسلم ، سردار ذوالفقار علی خان،پی ٹی آئی کی جانب سے غیر اعلانیہ طور پر سردار غلام عباس خان، راجہ یاسر سرفراز،اے این پی کے ضلعی صدر چوہدری عمران قیصرعباس،پاکستان تحریک انسانیت کے چیئرمین ڈاکٹر محمد طفیل، پاکستان پیپلز پارٹی کے ضلعی صدرسردار اظہر عباس، راجہ نثاء الحق ایڈووکیٹ نمایاں ہیں، جبکہ تحریک لیبک پاکستان، عوامی ملی مسلم لیگ،ایم ایم اے، مسلم لیگ ق اپنے اپنے ٹکٹوں کے لئے موزوں امیدواروں کی جانب سے رابطہ کرنے کے انتظار میں بیٹھے ہیں،این اے65میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی جانب سے سردار ممتاز خان ٹمن، پی ٹی آئی کے ضلعی صدر سردار منصور حیات ٹمن، مسلم لیگ ق کے صوبائی صدر چوہدری پرویز الہی، پاکستان پیپلز پارٹی کے ملک ہاشم خان ڈھرنال،عوامی نیشنل پارٹی کے محمد شفیق ملک، آزاد امیدوار کے طور پر سردار محمد فیض ٹمن ابھی تک امیدوار نظر آرہے ہیں۔بہرحال اگلے دو روز میں سیاسی پوزیشن واضح ہو جائے گی، صوبائی اسمبلی کی چار نشستوں پر چوبیس سے زائد امیدواروں کی ابتدائی فہرست حکومت کو بھجوائی گئی ہے۔اصل مقابلہ پاکستان مسلم لیگ (ن) اور پاکستان تحریک انصاف کے درمیان ہی ہوگا البتہ اگر سردار غلام عباس خان جو اس وقت آزاد امیدوار کے طور پر سامنے ہیں اور پاکستان تحریک انصاف سے انکے رابطوں کی تصدیق ہو رہی ہے اگر وہ پاکستان پیپلز پارٹی میں شامل ہو جائیں تو دونوں قومی اسمبلی کے حلقوں میں پاکستان تحریک انصاف تیسری پوزیشن پر جا سکتی ہے ۔

Subscribe to comments feed Comments (0 posted)

total: | displaying:

Post your comment

  • Bold
  • Italic
  • Underline
  • Quote

Please enter the code you see in the image:

Captcha
  • Email to a friend Email to a friend
  • Print version Print version
  • Plain text Plain text

Tagged as:

No tags for this article

Rate this article

0